لاہور (ایس این این) ملک میں بجلی کے ایک اور بڑے بریک ڈاؤن کا خدشہ پیدا ہو گیا، بجلی کی پیدوار مسلسل کمی سے خطرناک زون کے دہانے پر آ گئی، شارٹ فال 5 ہزار میگاواٹ سے تجاوز کر گیا۔ تفصیلات کے مطابق بجلی کی کم پیداوار ایک بار پھر ڈینجر زون کی طرف گامزن ہونے سے بریک ڈاؤن کا خدشہ پیدا ہوگیا۔ ذرائع کے مطابق کم از کم بجلی پیداوار سے فریکوئنسی کی حد ٹوٹی تو ملک پھر تاریکی میں ڈوب سکتا ہے، غیر متوازن پیداوار سے شمال، جنوب میں بجلی کا ترسیلی نظام بریک کر سکتا ہے۔ذرائع کا کہنا ہے کہ موسم سرما میں بجلی کی طلب 13 ہزار 500 میگاواٹ اور پیداوار 8 ہزار 800 میگا واٹ ریکارڈ کی گئی ہے، موسم سرما میں بجلی کا شارٹ فال 5 ہزار 500 میگاواٹ سے بڑھ رہا ہے۔


ذرائع نے کہا ہے کہ ماضی میں شمال جنوب میں بجلی کی ترسیل متاثر ہونے سے فریکوئنسی ٹرپ کر گئی تھی، فریکوئنسی ٹرپنگ سے ملک اندھیرے میں ڈوب گیا تھا۔ پاور ڈویژن ذرائع نے بتایا ہے کہ ملک میں پن بجلی کی پیداوار 800 میگاواٹ جبکہ سرکاری تھرمل پلانٹ سے 1500 میگا واٹ بجلی پیدا کی جا رہی ہے، آئی پی پیز 5 ہزار میگاواٹ اور نیو کلیئر سے 1500 میگا واٹ بجلی پیدا کی جا رہی ہے۔


جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں